ایپل کا اسرائیلی سافٹ ویئر کمپنی پر مقدمہ

Spread the Story
  • 213
    Shares

ایپل کمپنی نے جاسوسی سافٹ ویئر ‘پیگاسس’بنانے والی اسرائیلی کمپنی ‘این ایس او’ کے خلاف امریکا میں مقدمہ دائر کردیا۔ غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق ایپل نے صارفین کی ڈیوائسز کو ہیک کرنے کے لیے جاسوسی سافٹ ویئر پیگاسس استعمال کرنے کا الزام لگاتے ہوئے اسرائیلی کمپنی این ایس او کے خلاف امریکا میں مقدمہ دائر کردیا ہے۔

رپورٹس کے مطابق منگل کے روز امریکی وفاقی عدالت میں دائر کی گئی ایک قانونی شکایت میں ایپل نےاین ایس او کو 21ویں صدی کا غیر اخلاقی کرائے کا فوجی قراردے دیا۔
ایپل کی جانب سے کہا گیا ہے کہ اسرائیلی کمپنی این ایس او نے انسانی حقوق کی خلاف ورزی کرتے ہوئے سائبر سرویلنس ٹیکنالوجی کا استعمال کیا۔

خیال رہے کہ پیگاسس سرویلنس اسکینڈل میں انسانی حقوق کے لیےکام کرنے والے کارکنوں ، صحافیوں، سیاستدانوں اور دیگر اہم شخصیات کی جاسوسی کی رپورٹس سامنے آنے کے بعد امریکا نےبھی اسرائیلی کمپنی سےتعلقات محدود کرتے ہوئے اسرائیلی کمپنی پر تجارتی پابندی لگادی تھی۔

یاد رہے کہ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کچھ ماہ قبل ایک رپورٹ میں انکشاف کیا تھا کہ اسرائیلی کمپنی کے جاسوسی کے سوفٹ ویئر پیگاسس کے ذریعے دنیا بھر میں کم ازکم 50 ہزار افراد کی مبینہ جاسوسی کی گئی جبکہ جاسوسی کا دائرہ کم ازکم 50 ممالک تک پھیلا ہوا تھا۔

پیگاسس کو مبینہ طور پرسیاسی رہنماؤں اور صحافیوں کے فون کو ہیک کرنے کے لیے استعمال کیا گیا تھا۔ اس کے علاوہ امریکی اخبار کے مطابق جاسوسی کے اسرائیلی نظام سے پاکستان سمیت کئی ملکوں کی شخصیات کے فون ہیک کیےگئے۔

اخبار نے دعویٰ کیا تھا کہ پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کا پرانا نمبر بھی ہیک کرنےکی کوشش کی گئی تھی جبکہ بھارت میں اپوزیشن لیڈر راہول گاندھی کے فون کی بھی ہیکنگ کی گئی۔




install suchtv android app on google app store

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.