حکومت کا تعلیم میں ریوس گئیر: طلباء مایوس

Spread the Story

لاہور(جی سی این رپورٹ حکومت نے 2 ٹیکنالوجی کالجز بند کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے، ٹیکنالوجی کالج رائیونڈ اور انسٹیٹیوٹ آف ایمرجنگ ٹیکنالوجی بندکرکے اثاثہ جات پنجاب تیانجن یونیورسٹی کو منتقل کردیے جائیں گے، کالجز کے اساتذہ اور طلباء کے مستقبل کا فیصلہ تاحال نہیں کیا جاسکا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق حکومت نے لاہور کے 2 بڑے ٹیکنالوجی کے کالجز کو بند کرکے ان کے اثاثہ جات پنجاب تیانجن یونیورسٹی کو منتقل کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے، جس کے تحت دونوں کالجز کو پنجاب تیانجن یونیورسٹی کو منتقل کرنے کیلئے خاموشی سے باضابطہ کام بھی شروع کردیا گیا ہے۔

ٹیوٹا نے بھی اپنے ماتحت چلنے والے اداروں کو منتقل کرنے کیلئے سرنڈر کردیا ہے۔ گورنمنٹ ٹیکنالوجی کالج رائیونڈ کی 320 کنال اراضی بھی تیانجن یونیورسٹی کو دے دی جائے گی۔

ڈپلومہ آف ایسوسی ایٹ انجینئرنگ کے 5 پروگرام بھی بند کر دیے جائیں گے۔ زیرتعلیم طلباء کو ٹیوٹا کے دیگر اداروں میں منتقل کردیا جائے گا۔ دونوں کالجز کے اساتذہ کے مستقبل کا فیصلہ بھی تیانجن یونیورسٹی کرے گی۔

فی الحال دونوں کالجز کے 150اساتذہ کا مستقبل داؤ پر لگ گیا ہے۔ اساتذہ کو جوکالجز میں سرکاری گھر دیے گئے ان کو خالی کرنے کے احکامات جاری کردیے گئے ہیں۔ آئندہ کے تمام معاملات کا فیصلہ پنجاب تیانجن یونیورسٹی کی سنڈیکیٹ کرے گی۔ پنجاب تیانجن یونیورسٹی کے ایکٹ میں یہ واضح ہے کہ دونوں کالجز کی اراضی یونیورسٹی کی ملکیت ہوجائے گی۔ واضح رہے لاہور میں تین بڑے سرکاری کالجز تھے جن میں ٹیکنالوجی کی تعلیم دی جاتی تھی لیکن اب دو کالجز کو تیانجن یونیورسٹی کو منتقل کرنے کے بعد ریلوے روڈ کالج رہ گیا ہے، جہاں طلباء کو ٹیکنالوجی کی تعلیم دی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.